آرمینیااورآذربائیجان میں جنگ بندی معاہدہ طے پا گیا

آرمینیااورآذربائیجان میں جنگ بندی معاہدہ طے پا گیا ۔ارمینیا کی حکومت کا کہنا ہے کہ آذربائیجان کے ساتھ مسلح جھڑپوں کے بعد ماسکو کی مدد سے جنگ بندی معاہدہ طے پا گیا ہے۔ آرمینیا کے مطابق ان جھڑپوں میں آذربائیجان کے فورسز کے ہاتھوں اس کے 15فوجی ہلاک ہوئے۔
آرمینیا کی وزارت دفاع نے منگل کی رات دیر گئے اعلان کیا کہ روس کی مدد سے آذربائیجان کے ساتھ جنگ بندی معاہدہ طے پا گیا، جس کی وجہ سے سرحد پر ہونے والی مسلح جھڑپیں رک گئی ہیں۔ اس سے قبل آرمینیائی حکومت نے اپنے ایک بیان میں کہا تھا کہ پرانے دشمنوں کے ساتھ تازہ ترین جھڑپوں میں اس کے متعدد فوجی ہلاک ہو گئے۔

جنگ بندی کا یہ اعلان ایک ایسے وقت ہوا جب یورپی کونسل کے صدر چارلس مشیل نے کہا کہ انہوں نے آذربائیجان کے صدر الہام علی یوف اور آرمینیا کے وزیر اعظم نکول پشینیان سے بات چیت کی اور ان سے کہا ہے کہ ”خطے کی مشکل صورتحال” کا الزام ایک دوسرے پر عائد کرنے کے بجائے فوری طور جنگ بندی کا آغاز کریں اور کشیدگی کو ختم کریں۔

انہوں نے اپنی ایک ٹویٹ میں لکھا، ”یورپی یونین جنوبی کوہ قاف علاقے کی خوشحالی اور اس کے استحکام کے لیے کشیدگی پر قابو پانے کے لیے اپنے شراکت داروں کے ساتھ کام کرنے کے لیے پر عزم ہے۔”

فرانس کی وزارت خارجہ نے بھی یورپی کونسل کے صدر کے بیان کی حمایت کی اور اپنے ایک بیان میں کہا، ”فرانس تمام فریقوں سے اس جنگ بندی کا احترام کرنے کا مطالبہ کرتا ہے جس کا اعلان انہوں نے سہ فریقی مذاکرات کے بعد9 نومبر 2020 کو کیا تھا۔”

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے