چین کی جوہری ہتھیاروں کی تیاری، امریکہ کی تشویش

چین کی جوہری ہتھیاروں کی تیاری، امریکہ کی تشویش کا باعث بن رہی ہے۔ اطلاعات کے مطابق چین بین البر اعظمی بیلسٹک میزائلوں کا ذخیرہ کرنے کے لیے سو سے زائد زیر زمین گودام تعمیر کر رہا ہے۔

امریکا نے چین کے بین البر اعظمی بیلسٹک میزائلوں (آئی سی بی ایم) کے پروگرام میں تیزی سے ہونے والی توسیع کو تشویش ناک قرار دیا ہے۔ حالیہ برسوں میں بیجنگ اپنی عسکری صلاحیتوں کو تیزی سے وسعت دے رہا ہے۔

معروف امریکی اخبار ‘واشنگٹن پوسٹ’ میں بدھ کے روز ایک رپورٹ شائع ہوئی تھی جس میں کہا گیا ہے کہ چین شمال مغربی شہر یومین کے پاس ایک صحرا میں طویل فاصلے تک مار کرنے والے بین البر اعظمی میزائلوں کو محفوظ طریقے سے رکھنے کے لیے سو سے بھی زیادہ سیلوس (زیر زمین گودام یا گڈھے) تعمیر کر رہا ہے۔

یہ مضمون ایک سیٹلائٹ سے حاصل شدہ تصاویر سے اخذ کیے گئے مواد پر مبنی ہے۔ کیلیفورنیا کے مونٹیرے میں جوہری عدم پھیلاؤ سے متعلق ادارے ‘جیمز مارٹن سینٹر فار نان پرولیفریشن اسٹڈیز’ کے تجزیہ کاروں نے یہ تصاویر حاصل کی ہیں۔

امریکہ کا موقف

امریکی وزارت خارجہ کے ترجمان نیڈ پرائس نے جمعرات کے روز میڈیا بریفنگ کے دوران ایک سوال کے جواب میں کہا، یہ تعمیرات کافی تشویشناک ہیں۔ اس سے چینی حکومت کی نیت پر بھی سوال کھڑے ہوتے ہیں۔ اور جہاں تک ہم سمجھتے ہیں، اس سے جوہری خطرات کو کم کرنے کے لیے ہمارے عملی اقدامات کی اہمیت کو تقویت ملتی ہے۔”

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے