ڈنکی لگا کر یورپ جانے والوں کے لیےنئ مشکل

ڈنکی لگا کر یورپ جانے والوں کے لیےنئ مشکل ، ترکی نے نئے منصوبے پر کام شروع کر دیا۔ ترکی میں داخل ہونے والے غیر قانونی تارکین وطن کے خلاف کریک ڈاؤن تیز کردیا گیا۔سیکڑوں تارکین وطن کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔اس کے ساتھ ہی ترکی نے ایران کے ساتھ اپنی سرحد مکمل طور پر بند کرنے کے لیے بھی اقدامات شروع کردیئے ہیں۔

تفصیلات

تفصیلات کے مطابق ڈنکی لگا کر یورپ جانے والے پاکستانیوں کیلئے نئی مشکل کھڑی ہوگئی ہے۔اب ڈنکی لگا کر یورپ جانا اور بھی مشکل ہو گیا ہے۔ترکی ایران کےساتھ سرحد پر دیوار تعمیر کرنا شروع کر دی ہے۔ترکی ایران سرحد پر استوار کا مقصد افغانستان ایران اور پاکستان سے آنے والے تارکین کی اسمگلنگ کو روکنا ہے۔

ترک وزیر دفاع کا کہنا ہے کہ ترکی نے ایران کے ساتھ تین سو کلو میٹر کی سرحد پر دیوار کا کام شروع کر دیا۔ان کا کہنا ہے کہ سرحدی علاقے میں گشت کو بھی بڑھا دیا گیا ہے۔

یہ تمام اقدامات ان تارکین وطن کو روکنے کے لیے کیے گئے ہیں جو کہ ایران کی سرحد کے ذریعے ترکی میں داخل ہوتے ہیں اور پھر وہاں سے یورپی ممالک کا رخ کرتے ہیں۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے